Placeholder image

وزیر اعظم کے مشیر برائے خزانہ

وزیر اعظم کے مشیر برائے خزانہ

ڈاکٹر عبدالحفیظ شیخ


ڈاکٹر عبدالحفیظ شیخ عالمی شہرت یافتہ ماہر معاشیات ہیں جو معاشی پالیسیوں کی تیاری، ان کے انتظام اور عملدرآمد کا 38 سال سے زائد عرصے کا تجربہ رکھتے ہیں۔ ان کے عملی تجربے میں مندرجہ ذیل شامل ہیں:

  • ہارورڈ یونیورسٹی، کیمبرج
  •  ورلڈ بینک،  جہاں انہوں نے سعودی عرب میں بطور کنٹری ہیڈ اور ایشیاء، افریقہ، یورپ و لاطینی امریکہ کے 21 ممالک میں سینئر آفیسر کے طور پر مشیر کے فرائض سرانجام دیئے
  • وزیر خزانہ، منصوبہ بندی اور ترقی، صوبہ سندھ، پاکستان (2000-03)
  • سینیٹ آف  پاکستان کے 3 بار رکن منتخب ہوئے( 2003، 2010، 2012)
  • وفاقی وزیر برائے سرمایہ کاری و نجکاری، پاکستان (2003-06)
  • وفاقی وزیر برائے خزانہ، محصولات، معاشی امور، شماریات اور پلاننگ و ترقی(2010-13)
  • عمومی شراکت دار، عالمی سرمایہ کاری فنڈ
  • ڈاکٹر شیخ کو 2004ء میں  کاروباری برادری کی طرف سے ملکی خدمات کے اعتراف میں" مین آف دی ایئر" کے ایوارڈ سے نوازا گیا
  • وفاقی وزیر  برائے نجکاری و سرمایہ کاری کے طور پر ان کا 3 سالہ دور پاکستانی تاریخ کا  کامیاب ترین دور رہا، اس دوران 5 ارب ڈالر سے زائد مالیت کی 34 ٹرانزیکشنز شفاف طریقے سے انجام پذیر ہوئیں۔
  • سینیٹ آف پاکستان کے انتہائی احترام کی نگاہ سے دیکھے جانے والے ممبر رہے، وہ سینیٹ کی  ورلڈ ٹریڈ آرگنائزیشن پر کمیٹی کے  چیئرمین بھی رہے
  • انہوں نے  سعودی عرب، سری لنکا، انڈونیشیاء، ملائیشیاء، فلپائن، تھائی لینڈ، ویت نام، رومانیہ، چیک ریپبلک، ایران، کویت، ارجنٹائن، بنگلہ دیش، اردن، قطر، مالٹا، بوٹسوانہ، تنزانیہ، گھانا اور لیبیا کی حکومتوں کو رہنمائی 
    فراہم کی۔
  • ڈاکٹر شیخ اکنامکس میں پی ایچ ڈی کی ڈگری رکھتے ہیں۔