Placeholder image

سیلز ٹیکس کے بارے میں بنیادی معلومات

سیلز ٹیکس کے بارے میں بنیادی معلومات

رجسٹریشن اور سیلز ٹیکس کے گوشوارے جمع کروانے سے قبل ضروری ہے کہ  آپ کو ان طریقہ ہائے کار کے بارے میں بنیادی سمجھ بوجھ ہو۔ بنیادی تصورات کے بارے میں آگاہی سے نہ صرف تمام امور آسانی سے انجام پائیں گے بلکہ یہ مجوزہ طریقہ کار کے مطابق بھی ہوں گے۔

یہ ایک ایسا ٹیکس ہے جو وفاقی حکومت  سیلز ٹیکس ایکٹ 1990ء کے تحت  اشیاء کی فروخت اورترسیل،  نیز پاکستان درآمد کی جانے والی درآمدی اشیاء پر عائد کرتی ہے۔خدمات پر سیلز ٹیکس  وفاقی حکومت  اسلام آباد وفاقی علاقہ (خدمات پر ٹیکس) آرڈیننس 2001ء  کے تحت عائد کرتی ہے۔

اِن پٹ ٹیکس

ان پٹ ٹیکس  رجسٹرڈ فرد کی طرف سے قابل ٹیکس اشیاء و خدمات کی خریداری یا حصول پر عائد ہوتا ہے۔ اس میں درآمدات پرعائد ہونے والا  سیلز ٹیکس بھی شامل ہے۔

آؤٹ پٹ ٹیکس

یہ ایسی اشیاء و خدمات کی فروخت یا سپلائی پر عائد ہوتا ہے جن پر سیلز ٹیکس عائد ہوتا ہو۔

سیلز ٹیکس کا اطلاق

سیلز ٹیکس مندرجہ ذیل پر لاگو ہوتا ہے:۔

اشیاء 

تمام اشیاء پر سیلز ٹیکس لاگو ہوتا ہےماسوائے ان کے  جنھیں  سیلز ٹیکس ایکٹ 1990ء کے سیکشن 13 کے تحت چھٹے شیڈول کےاستثنیٰ دیاگیا ہے۔ اور جواشیاء سیکشن 13کے ذیلی شیڈول نمبر 6 میں درج ہیں۔ سیلز ٹیکس کے مقصد کے لیے  اشیاء کے زمرے میں ہر طرح کی منقولہ جائیداد ماسوائے اس کے جس پر فعال دعوے چل رہے ہوں، پیسہ، سٹاکس، شیئر ز اور سکیورٹیز شامل ہیں۔

پاکستان میں درآمدات

پاکستان میں درآمد کی جانے والی تمام اشیاءپر سیلز ٹیکس لاگو ہوتا ہے ماسوائے ان اشیاء کے جنھیں  ایکٹ کے چھٹا شیڈول سیکشن 13 کے تحت استثنیٰ حاصل ہے۔

استثنائی اشیاء

سیلز ٹیکس ایکٹ 1990ءکی دفعہ 13 کےتعت  چھٹے شیڈول میں صراحت کر دہ اور وضاحت کر دہ اشیاء جنہیں سیلز ٹیکس سے مستثنیٰ قرار دیا گیا ہے۔ حکومت کی طرف سے جاری کیے گئے نوٹیفکیشنز (ایس آر اوز) کے ذریعے 
دی گئی استثنیات کی تفصیلات بھی دیکھی جا سکتی ہیں۔

سیلز ٹیکس گائیڈ میں بہت سے بنیادی سوالات کے جوابات دیئے گئے ہیں اور معاونت فراہم کی گئی ہے، اس کی مدد سے  رجسٹریشن اور سیلز ٹیکس گوشواروں کی فائلنگ کے وقت بنیادی  غلطیوں سے بچا جا سکتا ہے۔

سیلز ٹیکس گائیڈ کئی سوالات کے جوابات کے لیے مددگار ثابت ہوگااور عام آدمی رجسٹریشن اور گوشوارہ کرتے وقت غیر ضروری غلطیوں اور کوتاہیوں سے بچ سکتا ہے۔